تازہ ترین :
logo
پیر‬‮   9   دسمبر‬‮   2019

شروع اللہ کے نام سے جو بڑا مہربان نہایت رحم والا ہے ِ

الم ﴿۱﴾یہ کتاب (قرآن مجید) اس میں کچھ شک نہیں (کہ کلامِ خدا ہے۔ خدا سے) ڈرنے والوں کی رہنما ہے ﴿۲﴾ جو غیب پر ایمان لاتے اور آداب کے ساتھ نماز پڑھتے اور جو کچھ ہم نے ان کو عطا فرمایا ہے اس میں سے خرچ کرتے ہیں ﴿۳﴾ اور جو کتاب (اے محمدﷺ) تم پر نازل ہوئی اور جو کتابیں تم سے پہلے (پیغمبروں پر) نازل ہوئیں سب پر ایمان لاتے اور آخرت کا یقین رکھتے ہیں ﴿



اگر آپ کو کسی خاتون کا کوئی موبائل میسج یا چٹ پرلکھا پیغام موصول ہو جس میں آپ سے یہ لباس پہن کر آنے کی فرمائش کی جائے تو خبردار رہیں۔۔ورنہ آپ کی واٹ لگ جائے گی ،دلچسپ واقعہ

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) مرد بسا اوقات بڑے دل پھینک واقعہ ہوتے ہیں۔انھیں کسی خاتون کی جانب سے کسی موبائل میسج یا چٹ پر لکھا کوئی محبت بھرا پیغام موصول ہو جائے بھلے ہی اس کے غیر حقیقی ہونےکے امکانات 90فیصد اور اس میں سچائی کا عنصر ہونے کے صرف 10فیصد امکانات ہی کیوں نہ ہوں۔ وہ اس کی تحقیق کی آخری حد تک جاتے ہیں اور پھر اس طرح ایکسپوز ہو جاتے ہیں کہ کئی دفعہ انھیں شرمندگی

کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔ ایسا ہی قصہ ایک دفتری ملازم کے ساتھ پیش آیا ۔ جسے ایک ایسا ہی پیغام موصول ہوگیا ۔اس قصے کو بیان کرنے والے ملک کے معروف دانشور اور ماہر تعلیم عدیل گیلانی لکھتے ہیں “کل جب آفس پہنچ کر اپنی دراز کھولی تو ایک پرچی اوپر ہی پڑی تھی جس پہ جلی حروف میں لکھا تھا “اگر آپ کو مجھ سے محبت ہے اور مجھ سے شادی کرنا چاھتے ہیں تو کل نیلے رنگ کی ٹائ پہن کر آنا میں سمجھ جاوں گی کہ آپ بھی مجھ سے شادی پہ راضی ہیں ” عبارت پڑھ کر دل حلق میں آگیا آفس میں کل تین ایسی خواتین تھیں جن کی طرف دھیان بار بار جاتا تھا لیکن ان میں کون ایسی حسینہ تھی جو مجھ سے شادی جیسے انتہائ اقدام پہ راضی تھی اس کا اندازہ لگانا مشکل ہی نہی ناممکن تھا سارا دن تینوں خواتین کا باری باری جائزہ لیتا رہا لیکن کسی ایک کے بارے میں حتمی رائے قائم نہی کرسکا چھٹی کے بعد گھر آکر بھی بار بار یہی سوچتا رہا کہ کیا کروں انکار کردوں یا نہ کروں پھر تینوں خواتین کی شکلیں بار بار آنکھوں کے سامنے لہراتی رہیں رات بے چینی میں گزری صبح ہوئ تو دل کڑا کرکے فیصلہ کیا کہ آج شلوار قمیض میں آفس جاوں گا تاکہ ٹائ لگانا ہی نہ پڑے لیکن نہ معلوم کیسے ارادہ تبدیل ہوا اور سوٹ پہن کر نیلی ٹائ لگائ پرفیوم کا ضرورت سے زیادہ استعمال کیااور دل ہی دل میں فیصلہ کیا کہ کیا حرج ہے اگر کوئ خاتون مجھ سے شادی کرنا چاھتی ہے تو اسکا دل کیوں توڑوں ؟؟ کسی کے کام آنا بھی ثواب ہے اس خصوصی تیاری میں ٹائم بھی اضافی ہی لگا بھاگتے بھاگتے آفس پہنچا تو یہ دیکھ کر حیران رہ گیا کہ آج کوئ ایک درجن دل پھینک لوگ نیلی ٹائ لگائے ہوے تھے اور تینوں.خواتین مسکرا رہی تھیں



اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں


           

دلچسپ و عجیب


تازہ ترین خبریں